ابو الاسود دوئلی

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
ابو الاسود دوئلی
معلومات شخصیت
نام: ظالم بن عمرو بن سفیان
نسب: بنی‌ کنانہ مُضَر کی شاخ دئل
مشہور اقارب: ابو حرب، عطا
پیدائش: عام الفتح کا سال
اصحاب: امام علی، امام حسین
سماجی خدمات: تعلیم قرآت قرآن، قرآن کی اعراب گزاری، علم نحو کے بانی، شاعر
مذہب: اسلام

اَبو الاَسْوَدِ دُوئلی (متوفا 69 ھ) شاعر اور حضرت امام علی کے مشہور صحابی کا اصل نام ظالم بن عمرو بن سفیان تھا۔ انہیں علم نحو کے بانی کے عنوان سے یاد کیا جاتا ہے۔ جنگ جمل کے موقع پر جب حضرت عائشہ بصرہ کی جانب روانہ ہوئیں تو عثمان بن حُنیف نے انہیں ام المؤمنین سے مذاکرات کیلئے بھیجا۔ ابو الاسود جنگ جمل میں حضرت علی کی سپاہ میں شامل رہے۔ شعر کہنے میں خاص مہارت رکھتے تھے۔ امام علی اور امام حسین علیہم السلام کی مدح میں اشعار اور مرثیہ کہے۔ تاریخی روایات کے مطابق وہ پہلے شخص ہیں جنہوں نے قرآن کی آیات پر اعراب گزاری کا کام انجام دینے کا اقدام کیا۔ اکثر مآخذ نے ان کا سن وفات 69 ہجری اور مقام وفات بصرہ ذکر کیا ہے۔