سورہ معارج

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
حاقہ سورۂ معارج نوح
سوره معارج.jpg
ترتیب کتابت: 70
پارہ : 29
نزول
ترتیب نزول: 77 یا 79
مکی/ مدنی: مکی
اعداد و شمار
آیات: 44
الفاظ: 271
حروف: 972

سورہ معارج [سُورَةُ الْمَعَارِجِ] کو اس نام سے موسوم کیا گیا ہے کیونکہ لفظ معارج اس کی تیسری آیت میں مذکور ہے۔ اس سورت کا آغاز ایسے شخص کی داستان سے ہوتا ہے جس نے اپنے لئے اللہ کے عذاب مانگا؛ بعدازاں مؤمنین کے احوال و اوصاف اور کافروں کے حالات بیان کئے گئے ہیں اور یادآوری کرائی گئی ہے کہ قیامت کا دن روز حساب و کیفر ہے جس کا وعدہ کافروں کو دیا گیا ہے اور یہ سورت یہیں اختتام پذیر ہوجاتی ہے۔


نام

  • اس سورت کو "معارج" کہا جاتا ہے کیونکہ اس کی تیسری آیت میں پروردگار متعال کو ذوالمعارج (بلندی کے زینوں کا مالک) کے طور پر متعارف کرایا گیا ہے اور بعد کی آیت میں کہا گیا ہے کہ فرشتے اور روح ـ اس روز جو 50000 دن کے برابر ہے ـ اس ذات مقدسہ کی طرف عروج کرتے ہیں۔
  • اس سورت کا دوسرا نام ‌سَأَلَ ہے کیونکہ اس سورت کا آغاز اسی لفظ سے ہوتا ہے: سَأَلَ سَائِلٌ بِعَذَابٍ وَاقِعٍ؛ (ترجمہ: ایک طلب کرنے والے نے طلب کیا اس عذاب کو جو ہونے ہی والا ہے)۔
  • اس سورت کو کبھی کبھی واقع کہا جاتا ہے کیونکہ یہ لفظ بھی پہلی آیت میں مذکور ہے۔

کوائف

  • سورہ معارج کی آیات کی تعداد 44 اور قراءِ شام کی رائے کے مطابق 43 ہے اور اول الذکر عدد مشہور ہے۔
  • ترتیب مصحف کے لحاظ سے سترویں اور ترتیب نزول کے لحاظ سے ستترویں یا اناسی ویں قرآن اور مکی سورت ہے۔
  • اس سورت کے الفاظ کی تعداد 217 اور حروف کی تعداد 972 ہے اور یہ سورت مکی ہے۔
  • یہ سورت کی آیت آیت قسم ہے اور آیت 40 میں مشرقوں اور مغربوں کے پروردگار کی قسم کھائی گئی ہے۔

مفاہیم

اس سورت کا آغاز ایسے شخص کی داستان سے ہوتا ہے جس نے اپنے لئے اللہ کے عذاب مانگا۔[1] بعدازاں مؤمنین کے احوال و اوصاف اور کافروں کے حالات بیان کئے گئے ہیں اور یادآوری کرائی گئی ہے کہ قیامت کا دن روز حساب و کیفر ہے جس کا وعدہ کافروں کو دیا گیا ہے اور یہ سورت یہیں اختتام پذیر ہوجاتی ہے۔[2]

متن سورہ

سورہ معارج مکیہ ـ نمبر 70 ـ آیات 44 - ترتیب نزول 79
بِسْمِ اللّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ

سَأَلَ سَائِلٌ بِعَذَابٍ وَاقِعٍ ﴿1﴾ لِّلْكَافِرينَ لَيْسَ لَهُ دَافِعٌ ﴿2﴾ مِّنَ اللَّهِ ذِي الْمَعَارِجِ ﴿3﴾ تَعْرُجُ الْمَلَائِكَةُ وَالرُّوحُ إِلَيْهِ فِي يَوْمٍ كَانَ مِقْدَارُهُ خَمْسِينَ أَلْفَ سَنَةٍ ﴿4﴾ فَاصْبِرْ صَبْرًا جَمِيلًا ﴿5﴾ إِنَّهُمْ يَرَوْنَهُ بَعِيدًا ﴿6﴾ وَنَرَاهُ قَرِيبًا ﴿7﴾ يَوْمَ تَكُونُ السَّمَاء كَالْمُهْلِ ﴿8﴾ وَتَكُونُ الْجِبَالُ كَالْعِهْنِ ﴿9﴾ وَلَا يَسْأَلُ حَمِيمٌ حَمِيمًا ﴿10﴾ يُبَصَّرُونَهُمْ يَوَدُّ الْمُجْرِمُ لَوْ يَفْتَدِي مِنْ عَذَابِ يَوْمِئِذٍ بِبَنِيهِ ﴿11﴾ وَصَاحِبَتِهِ وَأَخِيهِ ﴿12﴾ وَفَصِيلَتِهِ الَّتِي تُؤْويهِ ﴿13﴾ وَمَن فِي الْأَرْضِ جَمِيعًا ثُمَّ يُنجِيهِ ﴿14﴾ كَلَّا إِنَّهَا لَظَى ﴿15﴾ نَزَّاعَةً لِّلشَّوَى ﴿16﴾ تَدْعُو مَنْ أَدْبَرَ وَتَوَلَّى ﴿17﴾ وَجَمَعَ فَأَوْعَى ﴿18﴾ إِنَّ الْإِنسَانَ خُلِقَ هَلُوعًا ﴿19﴾ إِذَا مَسَّهُ الشَّرُّ جَزُوعًا ﴿20﴾ وَإِذَا مَسَّهُ الْخَيْرُ مَنُوعًا ﴿21﴾ إِلَّا الْمُصَلِّينَ ﴿22﴾ الَّذِينَ هُمْ عَلَى صَلَاتِهِمْ دَائِمُونَ ﴿23﴾ وَالَّذِينَ فِي أَمْوَالِهِمْ حَقٌّ مَّعْلُومٌ ﴿24﴾ لِّلسَّائِلِ وَالْمَحْرُومِ ﴿25﴾ وَالَّذِينَ يُصَدِّقُونَ بِيَوْمِ الدِّينِ ﴿26﴾ وَالَّذِينَ هُم مِّنْ عَذَابِ رَبِّهِم مُّشْفِقُونَ ﴿27﴾ إِنَّ عَذَابَ رَبِّهِمْ غَيْرُ مَأْمُونٍ ﴿28﴾ وَالَّذِينَ هُمْ لِفُرُوجِهِمْ حَافِظُونَ ﴿29﴾ إِلَّا عَلَى أَزْوَاجِهِمْ أَوْ مَا مَلَكَتْ أَيْمَانُهُمْ فَإِنَّهُمْ غَيْرُ مَلُومِينَ ﴿30﴾ فَمَنِ ابْتَغَى وَرَاء ذَلِكَ فَأُوْلَئِكَ هُمُ الْعَادُونَ ﴿31﴾ وَالَّذِينَ هُمْ لِأَمَانَاتِهِمْ وَعَهْدِهِمْ رَاعُونَ ﴿32﴾ وَالَّذِينَ هُم بِشَهَادَاتِهِمْ قَائِمُونَ ﴿33﴾ وَالَّذِينَ هُمْ عَلَى صَلَاتِهِمْ يُحَافِظُونَ ﴿34﴾ أُوْلَئِكَ فِي جَنَّاتٍ مُّكْرَمُونَ ﴿35﴾ فَمَالِ الَّذِينَ كَفَرُوا قِبَلَكَ مُهْطِعِينَ ﴿36﴾ عَنِ الْيَمِينِ وَعَنِ الشِّمَالِ عِزِينَ ﴿37﴾ أَيَطْمَعُ كُلُّ امْرِئٍ مِّنْهُمْ أَن يُدْخَلَ جَنَّةَ نَعِيمٍ ﴿38﴾ كَلَّا إِنَّا خَلَقْنَاهُم مِّمَّا يَعْلَمُونَ ﴿39﴾ فَلَا أُقْسِمُ بِرَبِّ الْمَشَارِقِ وَالْمَغَارِبِ إِنَّا لَقَادِرُونَ ﴿40﴾ عَلَى أَن نُّبَدِّلَ خَيْرًا مِّنْهُمْ وَمَا نَحْنُ بِمَسْبُوقِينَ ﴿41﴾ فَذَرْهُمْ يَخُوضُوا وَيَلْعَبُوا حَتَّى يُلَاقُوا يَوْمَهُمُ الَّذِي يُوعَدُونَ ﴿42﴾ يَوْمَ يَخْرُجُونَ مِنَ الْأَجْدَاثِ سِرَاعًا كَأَنَّهُمْ إِلَى نُصُبٍ يُوفِضُونَ ﴿43﴾ خَاشِعَةً أَبْصَارُهُمْ تَرْهَقُهُمْ ذِلَّةٌ ذَلِكَ الْيَوْمُ الَّذِي كَانُوا يُوعَدُونَ ﴿44﴾

قرآن کریم


ترجمہ
اللہ کے نام سے جو بہت رحم والا نہایت مہربان ہے

ایک طلب کرنے والے نے طلب کیا اس عذاب کو جو ہونے ہی والا ہے (1) کافروں کے لئے، اسے کوئی ٹالنے والا نہیں ہے (2) اللہ کی طرف سے جو بلندی کے زینوں کا مالک ہے (3) فرشتے اور روح اس کی بارگاہ میں بلندی کی منزلیں طے کر کے حاضر ہوں گے ایسے دن میں جس کی مقدار پچاس ہزار برس کی ہے (4) تو آپ اچھے طریقہ پر صبروبرداشت سے کام لیجئے (5) وہ لوگ اسے دور سمجھتے ہیں (6) اور ہم اسے نزدیک جانتے ہیں (7) جس دن آسمان مثل پگھلی ہوئی چاندی کے ہو گا (8) اور پہاڑ مثل دھنکے ہوئے رنگ برنگ اون کے ہوں گے (9) اور کوئی دوست دوسرے دوست کو نہ پوچھے گا (10) حالانکہ وہ انہیں دکھائے جا رہے ہوں گے گنہگار شخص آرزو مند ہو گا کہ کاش اس دن کے عذاب کے عوض میں وہ دے دیتا اپنے بیٹوں کو (11) اور اپنی رفقیہ حیات کو اور اپنے بھائی کو (12) اور اپنے بہت قریبی خاندان کو جو اس کے لئے جائے پناہ تھا (13) اور روئے زمین پر جتنے ہیں سب کو پھر یہ اسے چھٹکارا دے دیتا (14) ہرگز نہیں یہ تو بھڑکتی ہوئی آگ کا شعلہ ہے (15) جو جوڑ بند کو الگ کر دے گا (16) وہ اپنی طرف بلائے گا اسے جس نے روگردانی کی اور پیٹھ پھرائی (17) اور دولت اکٹھا کی اور اسے محفوظ جگہوں میں رکھا (18) یقینا انسان بہت چھوٹے دل والا پیدا ہوا ہے (19) جب اس پر کوئی مصیبت آتی ہے تو وہ بے قرار ہو جاتا ہے (20) اور جب کچھ بھی دولت ہاتھ آتی ہے تو بخل سے کام لیتا ہے (21) سوا ان نماز گزاروں کے (22) جو ہمیشہ نماز کے پابند رہتے ہیں (23) اور جن کے مال میں ایک مقرر حق ہے (24) سوال کرنے والے اور نہ سوال کرنے والے محتاج کے لئے (25) اور جو جزاء وسزا کے دن کو سچ مانتے ہیں (26) اور جو اپنے پروردگار کی طرف سے سزا سے ڈرتے رہتے ہیں (27) یقیناان کے پروردگار کی سزا ایسی ہے جس سے مطمئن نہیں ہونا چاہیے (28) اور وہ جو اپنی شرمگاہوں کو محفوظ رکھتے ہیں (29) سوا اپنی بیویوں اور ان کنیزوں کے جو ان کی ملکیت میں ہیں کہ اس میں ان پر کوئی الزام نہیں ہے (30) تو جو اس سے آگے بڑھے تو یہ لوگ ستمگار ہیں (31) اور وہ جو اپنی امانتوں اور عہدوپیمان کا لحاظ رکھنے والے ہیں (32) اور وہ جو اپنی گواہیوں پر برقرار رہتے ہیں (33) اور وہ جو اپنی نماز کی حفاظت کرنے والے ہیں (34) یہ لوگ بہشتوں میں عزت کے ساتھ جاگزین ہیں (35) تو کیا ہو گیا ہے ان لوگوں کو جو کافر ہیں کہ وہ آپ کی طرف دوڑے چلے آتے ہیں (36) دائیں اور بائیں سے غول پر غول؟(37) کیا ان میں سے ہر ایک یہ لالچ رکھتا ہے کہ وہ نعمتوں والے بہشت میں داخل کر دیا جائے گا؟(38) ہرگز نہیں بلاشبہ ہم نے انہیں پیدا کیا ہے اس سے جو وہ جانتے ہیں (39) تو نہیں قسم کھاتا ہوں مشرقوں اور مغربوں کے پروردگارکی کہ ہم اس پر قدرت رکھتے ہیں (40) کہ ان کے بدلے ان سے بہتر پیدا کر دیں اور ہمیں بے بس بنایا نہیں جا سکتا (41) تو چھوڑئیے انہیں کہ یونہی اپنی سرگرمیوں اور کھیل کود میں مصروف رہیں یہاں تک کہ ان کا سامنا ہو ان کے اس دن سے جس کا ان سے وعدہ وعید کیا جا رہا ہے (42) جس دن یہ نکلیں گے قبروں سے تیزی کے ساتھ جیسے وہ بتوں کے معبودوں کی طرف دوڑتے ہیں (43) ان کی نگاہیں جھکی ہوئی، ذلت اور عاجزی ان پر چھائی ہوئی ہو گی۔ وہی وہ دن ہے جس کا ان سے وعدہ وعید کیاجا رہا ہے (44)



پچھلی سورت:
سورہ حاقہ
سورہ 70 اگلی سورت:
سورہ نوح
قرآن کریم

(1) سورہ فاتحہ (2) سورہ بقرہ (3) سورہ آل عمران (4) سورہ نساء (5) سورہ مائدہ (6) سورہ انعام (7) سورہ اعراف (8) سورہ انفال (9) سورہ توبہ (10) سورہ یونس (11) سورہ ہود (12) سورہ یوسف (13) سورہ رعد (14) سورہ ابراہیم (15) سورہ حجر (16) سورہ نحل (17) سورہ اسراء (18) سورہ کہف (19) سورہ مریم (20) سورہ طہ (21) سورہ انبیاء (22) سورہ حج (23) سورہ مؤمنون (24) سورہ نور (25) سورہ فرقان (26) سورہ شعراء (27) سورہ نمل (28) سورہ قصص (29) سورہ عنکبوت (30) سورہ روم (31) سورہ لقمان (32) سورہ سجدہ (33) سورہ احزاب (34) سورہ سباء (35) سورہ فاطر (36) سورہ یس (37) سورہ صافات (38) سورہ ص (39) سورہ زمر (40) سورہ غافر (41) سورہ فصلت (42) سورہ شوری (43) سورہ زخرف (44) سورہ دخان (45) سورہ جاثیہ (46) سورہ احقاف (47) سورہ محمد (48) سورہ فتح (49) سورہ حجرات (50) سورہ ق (51) سورہ ذاریات (52) سورہ طور (53) سورہ نجم (54) سورہ قمر (55) سورہ رحمن (56) سورہ واقعہ (57) سورہ حدید (58) سورہ مجادلہ (59) سورہ حشر (60) سورہ ممتحنہ (61) سورہ صف (62) سورہ جمعہ (63) سورہ منافقون (64) سورہ تغابن (65) سورہ طلاق (66) سورہ تحریم (67) سورہ ملک (68) سورہ قلم (69) سورہ حاقہ (70) سورہ معارج (71) سورہ نوح (72) سورہ جن (73) سورہ مزمل (74) سورہ مدثر (75) سورہ قیامہ (76) سورہ انسان (77) سورہ مرسلات (78) سورہ نباء (79) سورہ نازعات (80) سورہ عبس (81) سورہ تکویر (82) سورہ انفطار (83) سورہ مطففین (84) سورہ انشقاق (85) سورہ بروج (86) سورہ طارق (87) سورہ اعلی (88) سورہ غاشیہ (89) سورہ فجر (90) سورہ بلد (91) سورہ شمس (92) سورہ لیل (93) سورہ ضحی (94) سورہ شرح (95) سورہ تین (96) سورہ علق (97) سورہ قدر (98) سورہ بینہ (99) سورہ زلزال (100) سورہ عادیات (101) سورہ قارعہ (102) سورہ تکاثر (103) سورہ عصر (104) سورہ ہمزہ (105) سورہ فیل (106) سورہ قریش (107) سورہ ماعون (108) سورہ کوثر (109) سورہ کافرون (110) سورہ نصر (111) سورہ مسد (112) سورہ اخلاص (113) سورہ فلق (114) سورہ ناس


متعلقہ مآخذ

پاورقی حاشیے

  1. اس بارے میں مفسرین کی آراء سے آگہی کے لئے رجوع کریں: قرآن-ترجمه، توضیحات و واژه نامه‌ها از بهاءالدین خرمشاهی، ص568۔
  2. دانشنامه قرآن و قرآن پژوهی، ج2، صص1258۔


مآخذ