سورہ علق

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
تین سورۂ علق قدر
سوره علق.jpg
ترتیب کتابت: 96
پارہ : 30
نزول
ترتیب نزول: 1
مکی/ مدنی: مکی
اعداد و شمار
آیات: 19
الفاظ: 72
حروف: 288

سوره علق [سُوْرَةُ العَلَقِ] کو اس لئے سورہ علق کہا گیا ہے کہ خداوند متعال دوسری آیت میں فرماتا ہے کہ اس نے انسان کو خون کے جمے ہوئے ایک ٹکڑے سے پیدا کیا ہے۔ یہ سورت حجم و کمیت کے لحاظ سے مفصلات اور اوساط کے زمرے میں آتی ہے اور اس کا شمار قرآن کریم کی چھوٹی سورتوں میں ہوتا ہے۔ یہ سور عزائم میں چوتھی اور آخری نیز [واجب و مستحب) سجدوں کی حامل چودہ سورتوں میں بھی آخری سورت ہے۔ اس سورت کی آخری آیت کا سجدہ واجب ہے۔

نام

  • اس سورت کو سورہ علق کہتے ہیں کیونک اس کی دوسری آیت میں ارشاد ہوا ہے کہ انسان کو "علق" (یعنی جمے ہوئے خون) سے خلق کیا گیا ہے۔
  • اس سورت کا دوسرا نام سورہ اقرأ ہے اور یہ کا سبب اس سورت کا ابتدائی لفظ ہے۔
  • کبھی اس سورت کو پوری ابتدائی آیت سے موسوم و معنون کرکے اس کو سورہ اقرأ باسم ربک کہا جاتا ہے۔

کوائف

  • اس سورت کی آیات کی تعداد قراءِ عراق کے قول کے مطابق 19، قراءِ شام کے نزدیک 18 اور قراءِ حجاز کی رائے کے مطابق 20 ہے لیکن اول الذکر رائے مشہور اور معمول ہے۔
  • اس سورت کے الفاظ اور حروف کی تعداد بالترتیب 72 اور 288 ہے۔
  • سورہ علق ترتیب مصحف کے لحاظ سے چھیانوےویں اور ترتیب نزول کے لحاظ سے پہلی سورت ہے جو مکی سورتوں میں سے ہے۔
  • حجم و کمیت کے لحاظ سے مفصلات نیز اوساط کے زمرے میں آتی ہے؛ قرآن کریم کی چھوٹی سورتوں میں سے ہے اور تیسویں پارے کے تیسرے حزب کے آخر میں مندرج ہے۔
  • سجدوں کی حامل چودہ سورتوں نیز چار واجب سجدوں کی حامل سورتوں میں آخری نمبر پر ہے۔
  • اس سورت کی آخری آیت کا سجدہ واجب ہے۔

مفاہیم

  • یہ سورت حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ کو وحی پڑھنے کی دعوت دیتی ہے اور اس بیان کے ساتھ ـ کہ خداوند متعال نے انسان کو سکھا دیا وہ جو وہ نہیں جانتا تھا ـ اس نکتے کی طرف اشارہ کرتی ہے کہ جب انسان مادی اور دنیاوی لحاظ سے بےنیازی اور غِنی' محسوس کرتا ہے تو سرکشی پر اتر آتا ہے۔
  • یہ سورت منکر انسان کی توصیف کرتی ہے کہ وہ اللہ کے بندوں کو عبادت اور اللہ کی راہ سے روک لیتا ہے حالانکہ وہ نہیں جانتا کہ وہ خود اپنی تباہی کا ساماں کررہا ہے۔[1]
سورہ علق کے مضامین[2]
 
 
سورہ علق لوگوں کو اللہ کی طرف دعوت دینے میں پیغمبر کی ذمہ داریاں
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
دوسری ذمہ داری" آیہ ۹-۱۶
اللہ کی بندگی کرنا اور سرکش لوگوں کی پیروی نہ کرنا
 
پہلی ذمہ داری؛ آیہ ۱-۵
اللہ تعالی کا تعارف
 
 
 
 
 
 
 
 
پہلا نکتہ؛ آیہ ۶-۸
اللہ کے فرمان کی اطاعت نہ کرنا
 
پہلا نکتہ؛ آیہ ۱-۲
اللہ نے انسان کو جمے ہوئے خون سے خلق کیا
 
 
 
 
 
 
 
 
دوسرا نکتہ؛ آیہ ۹-۱۴
سرکش لوگوں کا پیغمبر کی توحیدی دعوت کی مخالفت
 
دوسرا نکتہ؛ آیہ ۳-۵
انسان کی جتنی ضرورت تھی اللہ نے اسے اتنا سکھایا
 
 
 
تیسرا نکتہ؛ آیہ ۱۵-۱۸
اللہ کی مخالف کا نتیجہ، خواری اور ذلت
 
 
 
چوتھا نکتہ؛ آیہ ۱۹
سرکش لوگوں کے مقابلے میں پیغمبر کی ذمہ داری


متن سورہ

سوره علق مکیہ ۔ نمبر 96۔ آیات 19 ترتیب نزول 1
ترجمہ
بِسْمِ اللَّـهِ الرَّ‌حْمَـٰنِ الرَّ‌حِيمِ

اقْرَأْ بِاسْمِ رَبِّكَ الَّذِي خَلَقَ ﴿1﴾ خَلَقَ الْإِنسَانَ مِنْ عَلَقٍ ﴿2﴾ اقْرَأْ وَرَبُّكَ الْأَكْرَمُ ﴿3﴾ الَّذِي عَلَّمَ بِالْقَلَمِ ﴿4﴾ عَلَّمَ الْإِنسَانَ مَا لَمْ يَعْلَمْ ﴿5﴾ كَلَّا إِنَّ الْإِنسَانَ لَيَطْغَى ﴿6﴾ أَن رَّآهُ اسْتَغْنَى ﴿7﴾ إِنَّ إِلَى رَبِّكَ الرُّجْعَى ﴿8﴾ أَرَأَيْتَ الَّذِي يَنْهَى ﴿9﴾ عَبْدًا إِذَا صَلَّى ﴿10﴾ أَرَأَيْتَ إِن كَانَ عَلَى الْهُدَى ﴿11﴾ أَوْ أَمَرَ بِالتَّقْوَى ﴿12﴾ أَرَأَيْتَ إِن كَذَّبَ وَتَوَلَّى ﴿13﴾ أَلَمْ يَعْلَمْ بِأَنَّ اللَّهَ يَرَى ﴿14﴾ كَلَّا لَئِن لَّمْ يَنتَهِ لَنَسْفَعًا بِالنَّاصِيَةِ ﴿15﴾ نَاصِيَةٍ كَاذِبَةٍ خَاطِئَةٍ ﴿16﴾ فَلْيَدْعُ نَادِيَه ﴿17﴾ سَنَدْعُ الزَّبَانِيَةَ ﴿18﴾ كَلَّا لَا تُطِعْهُ وَاسْجُدْ وَاقْتَرِبْ ﴿19﴾(سجدة واجبة)

اللہ کے نام سے جو بہت رحم والا نہایت مہربان ہے

پڑھئے اپنے پروردگار کے نام کے سہارے سے جس نے پیدا کیا (1) خون کے جمے ہوئے ایک ٹکڑے سے انسان کو پیدا کیا (2) پڑھئے اور آپ کا پروردگار وہ بہت بڑا فضل وکرم والا ہے (3) جس نے تعلیم کا سامان کیا قلم کے ساتھ (4) انسان کو وہ تعلیم دی جسے وہ نہیں جانتا تھا (5) ہرگز نہیں، انسان سرکشی کرتا ہے (6) کہ وہ اپنے کو بے نیاز سمجھتا ہے (7) حالانکہ یقینا تمہارے پروردگار ہی کی طر ف پلٹنا ہے (8) کیا تم نے دیکھا اس شخص کو جو منع کرتا ہے (9) ایک بندے کو جب وہ نماز پڑھتا ہے (10) کیا تم نے دیکھا اگر وہ صحیح راستے پر ہے (11) یا پرہیزگاری کی دعوت دیتا ہے (12) کیا تم نے غور کیا اگر یہ شخص جھٹلاتا ہو اور روگردانی کرتا ہو (13) کیا وہ نہیں جانتا کہ اللہ دیکھ رہا ہے؟ (14) ہرگز نہیں، اگر وہ باز نہ آیا تو ہم پیشانی کے بال پکڑ کر اسے کھینچیں گے (15) ایسی پیشانی جو دروغ گو اور خطاکار کی پیشانی ہے (16) تو وہ بلائے اپنے مجمع کو (17) ہم صدا دیں گے اپنے ہر کاروں کو (18) ہرگز نہیں اس کا کہنا نہ مانئے اور سربسجود ہو جیے اور اپنے پروردگار کاقرب حاصل کیجئے (19)(واجب سجدہ)


پچھلی سورت:
سورہ تین
سورہ 96 اگلی سورت:
سورہ قدر
قرآن کریم

(1) سورہ فاتحہ (2) سورہ بقرہ (3) سورہ آل عمران (4) سورہ نساء (5) سورہ مائدہ (6) سورہ انعام (7) سورہ اعراف (8) سورہ انفال (9) سورہ توبہ (10) سورہ یونس (11) سورہ ہود (12) سورہ یوسف (13) سورہ رعد (14) سورہ ابراہیم (15) سورہ حجر (16) سورہ نحل (17) سورہ اسراء (18) سورہ کہف (19) سورہ مریم (20) سورہ طہ (21) سورہ انبیاء (22) سورہ حج (23) سورہ مؤمنون (24) سورہ نور (25) سورہ فرقان (26) سورہ شعراء (27) سورہ نمل (28) سورہ قصص (29) سورہ عنکبوت (30) سورہ روم (31) سورہ لقمان (32) سورہ سجدہ (33) سورہ احزاب (34) سورہ سباء (35) سورہ فاطر (36) سورہ یس (37) سورہ صافات (38) سورہ ص (39) سورہ زمر (40) سورہ غافر (41) سورہ فصلت (42) سورہ شوری (43) سورہ زخرف (44) سورہ دخان (45) سورہ جاثیہ (46) سورہ احقاف (47) سورہ محمد (48) سورہ فتح (49) سورہ حجرات (50) سورہ ق (51) سورہ ذاریات (52) سورہ طور (53) سورہ نجم (54) سورہ قمر (55) سورہ رحمن (56) سورہ واقعہ (57) سورہ حدید (58) سورہ مجادلہ (59) سورہ حشر (60) سورہ ممتحنہ (61) سورہ صف (62) سورہ جمعہ (63) سورہ منافقون (64) سورہ تغابن (65) سورہ طلاق (66) سورہ تحریم (67) سورہ ملک (68) سورہ قلم (69) سورہ حاقہ (70) سورہ معارج (71) سورہ نوح (72) سورہ جن (73) سورہ مزمل (74) سورہ مدثر (75) سورہ قیامہ (76) سورہ انسان (77) سورہ مرسلات (78) سورہ نباء (79) سورہ نازعات (80) سورہ عبس (81) سورہ تکویر (82) سورہ انفطار (83) سورہ مطففین (84) سورہ انشقاق (85) سورہ بروج (86) سورہ طارق (87) سورہ اعلی (88) سورہ غاشیہ (89) سورہ فجر (90) سورہ بلد (91) سورہ شمس (92) سورہ لیل (93) سورہ ضحی (94) سورہ شرح (95) سورہ تین (96) سورہ علق (97) سورہ قدر (98) سورہ بینہ (99) سورہ زلزال (100) سورہ عادیات (101) سورہ قارعہ (102) سورہ تکاثر (103) سورہ عصر (104) سورہ ہمزہ (105) سورہ فیل (106) سورہ قریش (107) سورہ ماعون (108) سورہ کوثر (109) سورہ کافرون (110) سورہ نصر (111) سورہ مسد (112) سورہ اخلاص (113) سورہ فلق (114) سورہ ناس


متعلقہ مآخذ

پاورقی حاشیے

  1. دانشنامه قرآن و قرآن پژوهی، ج2، ص1266۔
  2. خامہ‌گر، محمد، ساختار سورہ‌ہای قرآن کریم، تہیہ مؤسسہ فرہنگی قرآن و عترت نورالثقلین، قم، نشر نشرا، چ۱، ۱۳۹۲ش.


مآخذ