امامہ بنت ابی العاص

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

اُمامَہ بنت ابی‌العاص بن رَبیع زینب رسول خدا کی (منہ بولی) بیٹی کی بیٹی ہے جس کی ماں کا نام زینب تھا۔اس کے باپ کا نام ابو العاص بن ربیع تھا۔ امام علی (ع) نے حضرت فاطمہ(س) کی شہادت کے بعد امامہ سے شادی کی۔ کہتے ہیں کہ حضرت علی نے یہ شادی حضرت فاطمہ کی وصیت کی بنا پر کی۔

زندگی نامہ

اُمامَہ بعثت سے پہلے پیدا ہوئی اور ۵۰ ق میں فوت ہوئی ۔[1]

امامہ کے باپ کا نام ابوالعاص بن ربیع[2] (متوفی ۱۲ ذی‌الحجہ ۵۰ق)، ہے جو خدیجہ کی بہن کا بیٹا تھا اور وہ جنگ بدر میں مسلمانوں کے ہاتھوں اسیر ہوا [3] اس نے ۶ہجری قمری میں اسلام قبول کیا۔

اس کی ماں ابن اثیر کے بقول رسول خدا اور خدیجہ کی بیٹی زینب تھی [4] کہ جو ۸ ق میں فوت ہوئی۔[5] نیز وہ مدینے کے بقیع نامی قبرستان میں مدفون ہے۔

بچپن

رسول خدا (ص) اُمامَہ کو دوست رکھتے تھے ۔ پیغمبر جب نماز ادا کرتے تو وہ آپ کے کاندھوں پر ہوتی ۔ رسول جب سجدے میں جاتے تو اسے زمین پر بٹھا دیتے اور جب سجدے سے اٹھتے تو اسے پھر اٹھا لیتے۔[6]

نماز کے دوران بعض کام کرنے کے جواز کو فقہا نے اس روایت سے استفادہ کیا ہے ۔[7]

حضرت علی سے ازدواج

امام علی(ع) نے حضرت فاطمہ (س) کی شہادت کے بعد انکی سفارش پر اُمامَہ سے شادی کی [8] اور ان سے بیٹا پیدا ہوا جس کا نام محمد اوسط تھا [9] جب حضرت علی (ع) ابن ملجم کے ہاتھو