ویکی شیعہ

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
Wikishia-logo-fa.png
یو آر ایل Wikishia.net
صارفین عالمی اہل بیت اسمبلی کے محققین
نعرہ مکتب اہل بیت کا مجازی انسائیکلو پیڈیا
تجارتی؟ نہیں
نوع مجازی انسائیکلو پیڈیا
دستیاب زبانیں 10 زبانیں: (فارسی، عربی، انگریزی، اردو، ترکی، فرانسیس، ہسپانوی، انڈونیشین، جرمن اور روسی)
ملکیت عالمی اہل بیت اسمبلی
آغاز 15 جون 2013ء
موجودہ صورت حال فعال


ویکی شیعہ انٹرنیٹ پر موجود ایک دائرۃ المعارف ہے جس کا مقصد شیعہ اثناعشریہ اور مکتب اہل بیتؑ سے مربوط دوسرے تمام مذاہب کی شناخت میں دخیل مسائل اور مفاہیم کی پہچان ہے جن کا تعلق تاریخ، جغرافیا، فقہ، اصول فقہ، مفاہیم، اعتقادات اور اسامی وغیرہ سے ہو سکتا ہے۔ اس مقصد کے حصول کیلئے جو الفاظ اور اسامی کلیدی کردار ادا کر سکتے ہیں ان سب کی اس دائرۃ المعاارف میں توضیح دینے کی کوشش کی جائے گی۔

ویکی شیعہ میں انفرادی تجزیہ و تحلیل نیز ایسے جدید نظریات سے پرہیز کی جائے گی جو ابھی اثبات نہ ہوئے ہوں۔ علمی نظریات اور تاریخی مستندات میں موجود اختلافات کی درستی اور نادرستی کا فیصلہ قارئین کا حق ہے لذا اس سلسلے میں ویکی شیعہ اپنی لاتعلقی کا اظہار کرتا ہے۔

مذہبی اختلافات کو مد نظر رکھتے ہوئے، ویکی شیعہ کے مولفین کی یہ کوشش رہے گی کہ جہاں تک ممکن ہو ایسے قدیمی منابع اور مآخذ استعمال کریں جو دونوں بڑے مذاہب (شیعہ اور سنی) کے یہاں مورد تائید ہوں۔

ویکی شیعہ کی تاریخ

ایجاد کی ضرورت

دین و مذہب خاص کر اسلام اور تشیع ایسے موضوعات میں سے ہیں جن کے بارے میں انٹر نیٹ پر وافر مقدار میں معلومات موجود ہیں۔ لیکن ان سائٹوں کے مولفین صحیح طور پر اسلامی معارف سے آگاہ نہیں ہونے یا اسلام اور تشیع پر سرے سے اعتقاد ہی نہ رکھنے کی وجہ سے اسلامی موضوعات پر لکھے گئے مقالات میں بہت زیادہ غلطیاں دیکھنے میں آتی ہیں۔

شیعہ اعتقادات کے بارے میں انٹرنیٹ پر موجود خامیوں کو مد نظر رکھتے ہوئے اہل تشیع یا کسی بھی اہل تحقیق کو آسانی سے اہل تشیع اور اسلام کے صحیح اعتقادات تک رسائی کے لئے ایسی وب سایٹ کی ضرورت کو محسوس کیا گیا جو باقی تمام دائرۃ المعارف کی جگہ لے سکے۔ اسی وجہ سے مکتب اہل بیت (ع) کو صحیح طور پر متعارف کرانے کیلئے عالمی اہل بیت اسمبلی کی ثقافتی شعبے نے ویکی شیعہ کی ایجاد کا ارادہ کیا۔

ویکی شیعہ کا آغاز

22 مئی 2013 کو ویکی شیعہ کے مؤلفین کی پہلی نشست منعقد ہوئی جس کے بعد کئی ایک ورکشاپ رکھے گئے جن میں ویکی پر کام کرنے کے بارے میں ان مؤلفین کو آگاہ کیا گیا۔ یوں 17 جون 2013 کو ویکی شیعہ کا پہلا مقالہ نشر کیا گیا۔ کچھ ہی دنوں بعد یہ سائٹ تمام قارئین کی دسترس میں رکھ دیا گیا۔

ویکی شیعہ کا باقاعدہ افتتاح

سبط النبی کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں اسلامی جمہوری ایران کے صدر مملکت کے ہاتھوں ویکی شیعہ کی رونمائی

22 جون 2013 کو تہران میں "سبط النبی(ع)" کے نام سے ہونے والے اجلاس میں، اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت جناب حجت الاسلام حسن روحانی کے ہاتھوں سے ویکی شیعہ کا باقاعدہ افتتاح کیا گیا۔

خصوصیات

متنوع اور مختلف موضوعات

  • ویکی شیعہ کے موضوعات درج ذیل ہیں: عقائد، شخصیات، کتابیں، مکانات، واقعات، تہوار و رسومات اور مناسک، اور اہل بیت پر اعتقاد رکھنے والے فرقے، تشیع کی تاریخ اور ہر وہ عنوان جو کسی نہ کسی طریقے سے اہل بیت(ع) اور آپ کے ماننے والوں سے متعلق ہو۔
  • عام اسلامی مفاہیم جن پر سب مسلمان اتفاق رکھتے ہوں یا وہ جو اسلامی تاریخ سے مرتبط ہوں وہ بھی ویکی شیعہ پر پائے جائیں گے۔

دوسرے اسلامی فرقوں سے متعلق مفاہیم بھی اگر اہل بیت (ع) سے مرتبط پائے جائیں یا ان کا استعمال ویکی شیعہ میں زیادہ ہو تو ان کو بھی ویکی شیعہ میں متعارف کرایا جائے گا۔

محتوا پر نظارت

ویکی شیعہ پر منتشر کیے جانے والے مواد پر نگرانی کی جاتی ہے، اور ان کو زیر نظر رکھا جاتا ہے۔ اسی وجہ سے ویکی شیعہ کو اہل تشیع کے نظریات کی پہچان کے لئے معتبر ماخذ اور منبع کے طور پر مانا جا سکتا ہے۔

اردو ویکی شیعہ

سنہ 2014ء کے اواخر میں ویکی شیعہ میں اردو زبان کا بھی اضافہ کیا گیا اور 17 ربیع الاول سنہ 1437 ہجری قمری (بمطابق 29 دسمبر 2015ء) کو ویکی شیعہ اردو کے مضامین کی تعداد 1000 تک جا پہونچی۔