یوم الدوح

ویکی شیعہ سے
(یوم دوح سے رجوع مکرر)
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

یوم الدوح روز غدیر کا دوسرا نام ہے کہ جس روز پیغمبر اکرم(ص) نے امیرالمؤمنین علی(ع) کو اپنے بعد اپنا جانشین بنایا ۔

تسمیہ

دَوح (لَوح کے وزن پر) دَوحَہ کی جمع ہے۔ تنومند ، شاخوں اور پتوں سے بھرپور درخت کو کہتے ہیں ۔ غدیر خم کے مقام پر جہاں پیامبر اکرم(ص) نے علی کی خلافت کا اعلان کیا اس جگہ سمرات نامی بیابان میں چند درخت موجود تھے ۔نماز ظہر کے وقت آپ اس جگہ ان درختوں کے سائے تلے تشریف لے گئے وہاں نماز پڑھی ۔اس مناسبت روز غدیر کو یوم الدوح بھی کہتے ہیں ۔چنانچہ قدیم شیعہ شاعر کمیت بن زید اسدی (۱۲۶ق) اپنے قصیدے ہاشمیات میں کہتا ہے ؛ [1]

و یوم الدوح دوح غدیر خم ابان له الولایة لو اطیعا

امیرالمؤمنین (ع)نے روز غدیر کے خطبے میں یوم الدوح کی طرف اشارہ کیا ۔[2]

مربوط لنکس

حوالہ جات

  1. حکیمی، حماسہ غدیر، ص۶۷، پاورقی.
  2. ر.ک: حکیمی، حماسہ غدیر، ص۶۷.


منابع

  • حکیمی، محمدرضا، حماسہ غدیر، قم، دلیل ما، ۱۳۸۹.