ہفتہ وحدت

ویکی شیعہ سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
اسلام
اللہ
اصول دین توحید • عدل  • نبوت  • امامت  • قیامت
فروع دین نماز  • روزہ  • حج  • زکٰوۃ  • خمس  • جہاد  • امر بالمعروف  • نہی عن المنکر  • تولی  • تبری
اسلامی احکام کے مآخذ قرآن  • سنت  • عقل  • اجماع  • قیاس(اہل سنت)
اہم شخصیات پیغمبر اسلامؐ  • اہل بیت  • ائمہؑ  • خلفائے راشدین(اہل سنت)
اسلامی مکاتب شیعہ: امامیہ  • زیدیہ  • اسماعیلیہ  •
اہل سنت: سلفیہ  • اشاعرہ  • معتزلہ  • ماتریدیہ  • خوارج
ازارقہ  • نجدات  • صفریہ  • اباضیہ
مقدس شہر مکہ  • مدینہ  • قدس  • نجف  • کربلا  • کاظمین  • مشہد  • سامرا  • قم
مقدس مقامات مسجد الحرام  • مسجد نبوی  • مسجد الاقصی  • مسجد کوفہ  • حائر حسینی
اسلامی حکومتیں خلافت راشدہ  • اموی  • عباسی  • قرطبیہ  • موحدین  • فاطمیہ  • صفویہ  • عثمانیہ
اعیاد عید فطر  • عید الاضحی  • عید غدیر  • عید مبعث
مناسبتیں پندرہ شعبان  • تاسوعا  • عاشورا  • لیلۃ القدر  • یوم القدس


ہفتہ وحدت؛ 12 ربیع‌الاول سے 17 ربیع‌الاول کے درمیانی فاصلے کو کہا جاتا ہے۔ یہ دونوں تاریخیں مسلمانوں کے یہاں پیغمبر اکرم(ص) کی تاریخ ولادت کے حوالے سے مشہور ہیں؛ اہل سنت 12 ربیع الاول کو جبکہ اہل تشیع 17 ربیع الاول کو حضور(ص) کی ولادت واقع ہونے کے قائل ہیں۔

امام خمینی نے 27 نومبر 1981ء کو آیت اللہ منتظری[1] کی تجویز پر ان دو تاریخوں کے درمیانی فاصلے کو ہفتہ وحدت کا نام دیا تاکہ پیغمبر اکرم(ص) کی ولادت با سعادت کے طفیل اہل تشیّع اور اہل سنت آپس کے اختلافات بھلا کر وحدت اور اتحاد کا مظاہرہ کر سکیں۔

بعض اسلامی ممالک میں مذکورہ ایام میں شیعہ سنی اتحاد کے حوالے سے مختلف پروگرام منعقد ہوتے ہیں من جملہ ان پروگرموں میں ہر سال اسی حوالے سے منعقد ہونے والا تہران کا سالانہ کانفرنس قابل ذکر ہے۔

متعلقہ صفحات

فوٹو گیلری

حوالہ جات

  1. امام خمینی، صحیفہ امام، ج۱۵، ص۴۴۰ و ۴۵۵



منابع

  • امام خمینی، صحیفہ امام، تہران، مؤسسہ تنظیم و نشر آثار امام خمینی، ۱۳۷۸ش