غزوہ بنی قریظہ

ویکی شیعہ سے
(غزوہ بنى قريظہ سے رجوع مکرر)
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
غزوہ بنی قریظہ
سلسلۂ محارب:
رسول خداؐ کے غزوات
بنوقریظه.png

تاریخ
مقام مدینہ؛ بنو قریظہ کے قلعے
محل وقوع مدینہ؛ مسجد نبوی سے 5 کلومیٹر جنوب مشرق کی جانب
نتیجہ مسلمانوں کی فتح؛ یہودیوں نے سعد بن معاذ کو بطور ثالث مقرر کیا اور رسول اللہؐ نے بھی یہ تجویز قبول کرتے ہوئے سعد کو ہی مسلمانوں کی طرف سے بھی نمائندہ قرار دیا۔ جنہوں نے بروایتے دین یہود کی تعلیمات اور رسول خداؐ کے ساتھ ان کے معاہدے میں مندرجہ نکات کی روشنی میں ان کے جنگجو مردوں کے قتل اور بچوں اور عورتوں کی قید کا حکم سنایا اور آپؐ نے اس حکم کو اللہ کی مشیت کے مطابق قرار دیا۔
سبب بنو قریظہ نے عہد شکنی اور خیانت کا ارتکاب کیا اور غزوہ خندق میں شامل دشمنوں کے ساتھ تعاون کیا۔
ملک حجاز
فریقین
مسلمین یہود بنی قریظہ
قائدین
حضرت محمدؐ قبیلہ بنو قریظہ کے زعماء
نقصانات
بنو قریظہ کے 450 سے 800 تک جنگجؤوں کی ہلاکت