عین الوردہ

ویکی شیعہ سے
(عین الوردۃ سے رجوع مکرر)
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
جزیرہ(نقشہ)

عَینُ الوَردَه، دجلہ اور فرات کے درمیان واقع ایک علاقہ کا نام ہے جس کا شمار ماضی میں کوفہ و دمشق (شام) کے درمیان منزل یا قیام گاہ کے طور پر ہوتا تھا۔ یہ علاقہ وہاں پر قیام توابین کے واقع ہونے کی وجہ سے شہرت رکھتا ہے۔ اسی مقام پر سلیمان بن صرد خزاعی اور ان کے بعض ساتھیوں نے شہادت پائی ہے۔ یہ علاقہ راس العین کے نام سے بھی پہچانا جاتا ہے۔ راس العین شامی ریاست کے شمال مشرقی ضلع حسکہ میں واقع ہے۔

جغرافیائی محل وقوع

کہا جاتا ہے کہ عین الوردہ کوفہ و دمشق (شام) کے درمیان واقع ایک منزل یا قیام گاہ ہے۔[1] معجم البلدان میں آیا ہے: عین الوردہ وہی راس العین، جزیرہ (بین النہرین یا دجلہ و فرات کا درمیانی علاقہ) کا مشہور شہر ہے۔ جس میں اعراب کے درمیان ایک جنگ واقع ہوئی۔ اور اس کا شمار تاریخی ایام (ایام العرب) میں ہوتا ہے۔[2] راس العین شامی ریاست کے شمال مشرق کے ضلع حسکہ میں واقع ہے۔[3]

محل قیام توابین

تفصیلی مضمون: قیام توابین

عین الوردہ، سلیمان بن صرد خزاعی کی رہبری میں توابین اور عبید اللہ بن زیاد کے لشکر کے درمیان جنگ کی جگہ ہے۔ توابین نے امام حسین علیہ السلام کی شہادت کا بدلہ لینے اور نصرت امام میں کوتاہی کرنے کے سبب قیام کیا تھا۔ اس جنگ میں سلیمان بن صرد خزاعی اور ان کے بہت سے ساتھیوں نے اسی مقام پر جام شہادت نوش کیا۔[4]

حوالہ جات

  1. با کاروان حسینی، ۱۳۸۶ش، ج۵،ص.۱۵۶.
  2. حموی، معجم البلدان، ۱۳۹۹ق، ج۴، ص۱۸۰.
  3. مقالہ رأس العین، پایگاہ اینترنتی یبرود.
  4. محدثی، فرهنگ عاشورا، ۱۳۸۸ش، ص۳۳۲.


منابع

  • با کاروان حسینی، جمعی از نویسندگان، ترجمه عبدالحسین بینش، قم، زمزم هدایت، ۱۳۸۶ ش
  • محدثی، جواد، فرهنگ عاشورا، قم، نشر معروف، ۱۳۸۸ ش
  • حموی، یاقوت، معجم البلدان، بیروت،‌دار احیاء التراث العربی، ۱۳۹۹ ق